admin@chamkani.net | 0335-9687717

Maulana Rozi Gul Abid

Posted by Moxet in Proud Sokaniwaal | 0 comments

rozi_gul_abid

Maualana Rozi Gul Abid, a poet, was born in 1922 in Mohallah Yaseen Khel Chamkani, father of Sadrul Islam & Misbah Ul Islam. Belongs to Jamat E Islami Pakistan.


مولانہ روزی گل عابد 1922ء کو چمکنی کے محلہ یاسین خیل کے ایک متوسط گھرانے میں پیدا ہوئے۔مولانہ روزی گل عابد ایک ایسے شاعر تھے ۔ جنہوں نے نصب العین کی خاطر بے شمار اشعار کہے اور لکھے۔ لیکن اپنے اشعار کو سنبھال کر رکھنے کو شاید’’کاربے کار‘‘ سمجھ کر ایسا تکلف گوارا نہیں کیا۔ ان کے انتقال پر قاضی حسین احمد امیر جماعت اسلامی پاکستان ان کے گھر واقع چمکنی تشریف لائے ۔ تو ایک بڑا مجمع اکٹھا ہوا ۔ سوگوارا ان کے سامنے خدا کو خاضر و ناضر جان کر محترم قاضی حسین احمد صاحب نے کہا۔ کہ میں گواہی دیتا ہوں۔ کہ پشتو زبان کے معروف شاعر اور جماعت اسلامی کے دیرینہ رکن مولانہ روزی گل عابد آف چمکنی نے اپنی زندگی رضائے الٰہی کے حصول اور اقامت دین کی جدوجہد میں گزاری۔ ہزاروں کی آبادی والے قصبے چمکنی میں ان کے حلقہ قرآ ن کے شاگرد ہزاروں کی تعداد میں موجود ہیں۔ زندگی کے آخری دن تک اپنے گھر میں خواتین کے لئے درس قرآن کا سلسلہ چلاتے رہے۔ اور روزانہ ظہر کے بعد 40 تا 70 خواتین ان کے درس قرآن سے فیض یاب ہوتی رہیں قاضی حسین احمد صاحب نے کہا ۔ کہ انکی زندگی کا یہ درخشاں باب ان کا صدقہ جاریہ ہے ۔ انہوں نے حاضرین کو مولانہ روزی گل عابد( مرحوم ) کی مثال دیتے ہوئے ہدایت کی کہ اپنی زندگی قرآن پر عمل اور اس کی دعوت و تبلیغ کو فروغ دینے میں گزاریں۔
مولانہ روزی گل عابد حساس طبیعت کے مالک تھے۔ ملکی حالات اور تحریک اسلامی کے مختلف مرحلوں میں انہوں نے عمدہ دعوتی اشعار لکھے اور مناسب موقعوں پر بذاتِ خود خاص انداز میں خوش آوازی سے سنا کر عوام کو متاثر کیا۔ اگر چہ ان کے دلنشین اشعار مرتب ہوکر کتابی صورت میں شائع نہیں ہوئے۔ لیکن ان کے بیٹے اور دوست ان کی دعوتی نظموں کو مرتب کرکے کتابی صورت میں شائع کرنا چاہتے ہیں۔
روزی گل عابد ان لوگوں شامل تھے ۔جنہوں نے اشعار کے زریعے جماعت اسلامی کو عوام میں متعارف کرایا اور اپنی دعوتی نظموں سے تحریک اسلام کو رونق بخشی۔ 
وفات:۔
جماعت اسلامی چمکنی پشاور کے دیر ینہ رکن مولانہ روزی گل عابد آف چمکنی ۶ ذی الحجہ ۱۴۱۷ ھ 14اپریل 1997 ء 75سال کی عمر میں اپنے خالق حقیقی سے جاملے۔ الخدمت ہسپتال نشتر آباد پشاور کے ڈاکٹر اسلام اس سپاہی کے دل کو کوشش بسیار کے باوجود دوبارہ کام پر آمادہ نہ کرسکے۔15اپریل 1997ء کو دن کے دو بجے مولانہ روزی گل عابد مرحوم کو چمکنی کے نادان بابا قبرستان میں سپرد خاک کر دیا گیا۔ نماز جنازہ جماعت اسلامی صوبہ سرحد کے سابق بامیر اور ادارہ تفہیم القرآن مردان کے مہتمم حضرت مولانہ گوہر رحمان نے پڑھائی۔ جنازے میں زندگی کے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے لوگوں وکلاء‘ اساتذہ‘ طالب علم‘ تاجر‘ کاشتکار‘ جماعت اسلامی ،جمعیت طلبہ، شباب ملی تحریک ،محنت پاکستان اور مختلف پارٹیوں کے افراد نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔